Menu of Pakistan Film Magazine
Pakistn Film Magazine in Urdu/Punjabi


A Tribute To The Legendary Playback Singer Masood Rana

Masood Rana - مسعود رانا


کمار اور مسعود رانا

کمار
اداکار کمار
ہدایتکار ایس اے حافظ
کے والد تھے

تقسیم سے قبل کے ایک معروف اور سینئر اداکار کمار کی بطور فلمساز اور ان کے صاحبزادے ایس اے حافظ کی بطور ہدایتکار ، ایکشن اور کاسٹیوم فلم سجدہ (1967) ، مسلمانوں اور رومن ایمپائر کے تنازعہ پر بننے والی ایک تصوراتی فلم تھی جس میں محمد علی اور طالش نے مرکزی کردار ادا کیے تھے۔ اس فلم کی موسیقی منظوراشرف نے ترتیب دی تھی اور گیت قتیل شفائی نے لکھے تھے۔ اس فلم میں مسعود رانا کا تھیم سانگ ایک بڑا پرجوش اور ایمان افروز جنگی ترانہ تھا:

  • "نعرہ حیدری ، تلوار اٹھا لے اے مرد مومن ، خبیر شکن ، ہر صدا ہے تیری۔۔"

اس کورس گیت میں دیگر آوازیں نجمہ نیازی ، مالا اور ساتھیوں کی تھیں جو محمد علی ، لہری ، اسد جعفری ، دیبا ، زینت اور ساتھیوں پر فلمائی گئی تھیں۔

اداکار اسد جعفری

فلم سجدہ (1967) کے اس کورس گیت میں ایک اداکار اسد جعفری بھی تھے۔ وہ کراچی سے تعلق رکھنے والے ایک فنکار تھے جنھوں نے اپنے فلمی کیرئر کا آغاز فلم وعدہ (1957) سے کیا تھا اور ستر سے زائد فلموں میں معاون اداکار کے طور پر نظر آئے تھے۔ ایک فلم اور بھی غم ہیں (1960) میں جمیلہ رزاق کے ساتھ ہیرو تھے لیکن کامیابی نہیں ہوئی تھی۔ سلیم رضا کا فلم ہمسفر (1960) میں گایا ہوا مشہور زمانہ گیت

  • زندگی میں ایک پل بھی چین آئے نہ۔۔

اسد جعفری پر فلمایا گیا تھا۔ وہ ایک اعلیٰ تعلیم یافتہ صحافی بھی تھے اور کراچی کے ہفت روزہ اخبار جہاں کے مستقل کالم نویس تھے۔ 1934ء میں الہٰ آباد (بھارت) میں پیدا ہوئے اور 1995ء میں کراچی میں انتقال ہوا تھا۔

اے محبت زندہ باد

فلم سجدہ (1967) کے ہدایتکار ایس اے حافظ کا نام معاون ہدایتکار کے طور پر پہلی بار ہدایتکار شریف نیر کی معاشرتی فلم معصوم (1957) میں آتا ہے۔

1964ء میں ریلیز ہونے والی سپرہٹ اردو فلم توبہ ، بطور ہدایتکار ان کی پہلی فلم تھی۔ یہ گولڈن جوبلی فلم ، اداکارہ زیبا اور اس کے ہیرو کمال کی پہلی سپرہٹ فلم تھی جو کراچی کے ایک ہی سینما پر مسلسل پچیس ہفتے تک چلتی رہی تھی۔

اس فلم کا مرکزی کردار اداکار کمار نے کیا تھا جو بھارتی ہدایتکار محبوب کی تاریخی فلم مغل اعظم (1960) کی وجہ سے جانے جاتے تھے۔ اس فلم میں وہ ایک سنگتراش ہوتے ہیں اور ان پر محمدرفیع کا یہ گیت فلمایا جاتا ہے "اے محبت ، زندہ باد۔۔"

اداکار کمار کون تھے؟

اداکار کمار کا اصل نام سید میرحسن علی زیدی تھا۔ انھوں نے اپنے فلمی کیرئر کا آغاز اپنی جنم بھومی لکھنو (بھارت) سے فلم یاد رفتگان (1932) سے کیا تھا۔ اس کے بعد انھوں نے کلکتہ اور بمبئی میں ایک سو کے قریب فلموں میں کام کیا تھا جن میں ہیرو سے لے کر کیریکٹرایکٹرز کے رولز بھی تھے۔

پاکستان میں اداکار کمار نے دو درجن کے قریب فلموں میں معاون اداکار کے طور پر کام کیا تھا۔ فیصلہ (1959) پہلی فلم تھی جبکہ توبہ (1964) کامیاب ترین فلم تھی۔ اس فلم میں انھوں نے ایک بگڑے ہوئے امیرزادے کا کردار کیا تھا جو خدا کو بھول جاتا ہے لیکن جب برا وقت آتا ہے تو توبہ کرنا پڑتی ہے۔

اس فلم میں اے حمید کی دھن میں فیاض ہاشمی کی لکھی ہوئی ایک لازوال قوالی تھی

  • نہ ملتا گر یہ توبہ کا سہارا ، ہم کہاں جاتے۔۔

سلیم رضا ، منیر حسین اور ساتھیوں نے یہ قوالی گائی تھی جو پاکستانی فلموں کی مقبول ترین قوالی رہی ہے۔

متعدد فلموں میں ان کی کارکردگی زبردست رہی تھی جن میں خاص طور پر فلم جلوہ (1966) اور عصمت (1968) قابل ذکر ہیں۔ آخری فلم دھڑکن (1976) تھی اور 1982ء میں انتقال ہوا تھا۔

کمار ، پاکستان کیوں آئے تھے؟

اپنے ایک ریڈیو انٹرویو کے مطابق اداکار کمار ، اپنے بچوں کے اصرار پر بھارت چھوڑ کر پاکستان چلے آئے تھے۔

کراچی کے زیادہ تر اردو بولنے والے ہندوستانی مہاجرین ، تقسیم کے فسادات کے متاثرین نہیں تھے ، بیشتر لوگ رضاکارانہ طور پر پاکستان آئے تھے جہاں ایک بہتر مستقبل ان کا منتظر تھا۔ ایک روایت کے مطابق کراچی کا شاید ہی کوئی خاندان ایسا ہوگا کہ جن کے عزیزواقارب ، بھارت میں مقیم نہیں ہیں۔ کراچی کو ایک 'منی پاکستان' سنا کرتے تھے لیکن سوشل میڈیا کی برکات سے اب 'منی ہندوستان' بھی سننے کو مل رہا ہے۔۔!

ہدایتکار ایس اے حافظ کون تھے؟

اداکار کمار کے بیٹے سیدعلی حافظ (ایس اے حافظ) نے کل 21 فلمیں بنائی تھیں جو سبھی اردو زبان میں تھیں۔

توبہ (1964) کے بعد شبنم (1965) فلم میں رانی نے ٹائٹل رول کیا تھا ، کمال ہیرو تھے جبکہ زیبا اور محمد علی ، سائیڈ کرداروں میں تھے۔ اس فلم میں میڈم نور جہاں کا یہ گیت سپرہٹ ہوا تھا

  • چن لیا میں نے تمہیں ، سارا جہاں رہنے دیا۔۔

فلم صنم (1965) ، بطور فلمساز کمار کی دوسری اور آخری فلم تھی جس کے ہدایتکار بھی ان کے صاحبزادے ، ایس اے حافظ تھے۔ اس فلم میں محمد علی نے کمال کے باپ کا رول کیا تھا۔

فلم اک نگینہ (1969) میں موسیقار امجدبوبی کو متعارف کرایا گیا تھا اور اس فلم میں آئرن پروین کا یہ گیت بڑا دلچسپ تھا

  • ساری سکھیوں کے بلم گورے گورے ، اپنا بلم کالا۔۔

اسی سال کی فلم میری بھابھی (1969) میں نیرسلطانہ اور چائلڈسٹار مراد کی کارکردگی بڑی زبردست تھی۔ اس فلم میں مسعود رانا کا تھیم سانگ

  • نہ کوئی پٹوار نہ مانجی۔۔

چائلڈ سٹار مراد کے پس منظر میں گایا گیا تھا۔

فلم دل دے کے دیکھو (1969) میں مجیب عالم کا یہ گیت بھی سپرہٹ تھا

  • ذرا تم ہی سوچو ، بچھڑکے یہ ملنا ، محبت نہیں ہے تو پھر اور کیا ہے۔۔

فلم اللہ میری توبہ (1974) میں موسیقار امجدبوبی نے احمد رشدی سے چھ گیت گائے تھے جو کسی بھی فلم میں ان کے زیادہ سے زیادہ گیت گانے کا ریکارڈ ہے۔

مر گیا ، لٹ گیا ، میں تباہ ہوگیا

ہدایتکار ایس اے حافظ کی ایک فلم شکار (1974) بھی تھی جس میں مالا کا یہ گیت سپرہٹ ہوا تھا

  • دل لے کے مکر گیا ہائے ، سجن بے ایمان نکلا۔۔

اسی فلم میں مسعود رانا کے دو گیت تھے جن میں سے یہ گیت بڑا مقبول ہوا تھا

  • مر گیا ، لٹ گیا ، دل گیا ، میں تباہ ہوگیا ، اک شکاری ، اک نظرکا ، ہائے شکار ہو گیا۔۔

اسی فلم میں مسعود رانا نے ایک بڑا عجیب و غریب گیت گایا تھا۔ جہاں تک مجھے یاد ہے ، پورے گیت میں صرف یہی بول تھے

  • او ہو ، کڑی سیر کرے گی۔۔

اے حمید موسیقار تھے جبکہ یہ دونوں گیت شاہد پر فلمائے گئے تھے۔

اندھیر نگری چوپٹ راجہ

فلم راجہ جانی (1976) میں آخری بار ایس اے حافظ کی کسی فلم میں مسعود رانا کا کوئی گیت ملتا ہے۔ یہ بھی ایک بڑے کمال کا گیت تھا

  • اندھیر نگری ، چوپٹ راجہ ، بجائے جا پیارے ، بجائے جا باجا۔۔

یہ ایک اشارتی اور طنزیہ گیت تھا جو اس وقت کے وزیراعظم جناب ذوالفقارعلی بھٹو کی تحقیر کرنے کے لیے گوایا گیا تھا۔

بھٹو صاحب جیسی طلسماتی شخصیت کے مخالفین کی کبھی کمی نہیں رہی۔ اردو بولنے والوں میں عام طور پر سندھی ہونے کی وجہ سے ناپسند کیے جاتے تھے۔

ایسی ہی ایک فلم انسان اور گدھا (1973) بھی تھی جس میں پاکستانی عوام کو گدھے بنایا گیا تھا جو بظاہر بھٹو جیسے مسخرے یعنی رنگیلا کی تقریریں بڑے انہماک سے سنتے تھے اور اس کے لیے نعرے مارتے یا ڈھینچوں ڈھینچوں کرتے تھے۔

یہ فلم بنانے والے سیدکمال نے اپنی کتاب میں بڑی غلط بیانی کی تھی کہ اس فلم کو بھٹو دورحکومت میں نمائش کی اجازت نہیں دی گئی تھی جو سراسر لغو اور بکواس ہے ، میں نے یہ فلم اسی دور میں دیکھی تھی۔

یاد رکھنے کو کچھ نہ رہا

ایس اے حافظ کی بطور فلمساز اور ہدایتکار ایک یادگار فلم بارات (1978) تھی جس میں دو گیت بڑے کمال کے تھے۔ مہناز کا یہ سریلا گیت

  • میں ہوتی اک مورنی اور تو ہوتا اک مور ، جنگل جنگل ناچتی اور یہ کرتی شور ، میرا تو۔۔

اور اے نیر کا یہ گیت تو میں اکثر گنگنگاتا رہتا تھا

  • یاد رکھنے کو کچھ نہ رہا ، بھول جانے کو کچھ بھی نہیں ، دنیا اتنی بڑی ہے مگر ، دل لگانے کو کچھ بھی نہیں۔۔

تسلیم فاضلی صاحب نے بڑے کمال کے بول لکھے تھے۔

ایس اے حافظ نے بطور فلمساز اور ہدایتکار تین مزید فلمیں بنائی تھیں جن میں آتش (1980) ، سرالمبا (1983) اور آخری فلم آگ اور شعلے (1987) بھی تھی۔ ان کے بارے میں مزید معلومات دستیاب نہیں ہیں۔

مسعود رانا کے ایس اے حافظ کی 4 فلموں میں 5 گیت

(5 اردو گیت ... 0 پنجابی گیت )
1
فلم ... سجدہ ... اردو ... (1967) ... گلوکار: مالا ، مسعود رانا ، نجمہ نیازی مع ساتھی ... موسیقی: منظور اشرف ... شاعر: قتیل شفائی ... اداکار: دیبا ، محمد علی ، لہری ، اسد جعفری ، زینت مع ساتھی
2
فلم ... میری بھابی ... اردو ... (1969) ... گلوکار: مسعود رانا ... موسیقی: امجد بوبی ... شاعر: تسلیم فاضلی ... اداکار: (پس پردہ ، مراد)
3
فلم ... شکار ... اردو ... (1974) ... گلوکار: مسعود رانا ... موسیقی: اے حمید ... شاعر: تسلیم فاضلی ... اداکار: شاہد
4
فلم ... شکار ... اردو ... (1974) ... گلوکار: مسعود رانا ... موسیقی: اے حمید ... شاعر: ریاض الرحمان ساغر ... اداکار: شاہد
5
فلم ... راجہ جانی ... اردو ... (1976) ... گلوکار: مسعود رانا ... موسیقی: امجد بوبی ... شاعر: تسلیم فاضلی ... اداکار: محمد علی

Masood Rana & S.A. Hafiz: Latest Online film

Sajda

(Urdu - Black & White - Friday, 10 February 1967)


Masood Rana & S.A. Hafiz: Film posters
SajdaMeri BhabhiShikarRaja Jani
Masood Rana & S.A. Hafiz:

2 joint Online films

(2 Urdu and 0 Punjabi films)

1.10-02-1967Sajda
(Urdu)
2.23-08-1974Shikar
(Urdu)
Masood Rana & S.A. Hafiz:

Total 4 joint films

(4 Urdu, 0 Punjabi films)

1.10-02-1967: Sajda
(Urdu)
2.03-10-1969: Meri Bhabhi
(Urdu)
3.23-08-1974: Shikar
(Urdu)
4.30-01-1976: Raja Jani
(Urdu)


Masood Rana & S.A. Hafiz: 5 songs in 4 films

(5 Urdu and 0 Punjabi songs)

1.
Urdu film
Sajda
from Friday, 10 February 1967
Singer(s): Mala, Masood Rana, Najma Niazi & Co., Music: Manzoor Ashraf, Poet: , Actor(s): Deeba, Mohammad Ali, Lehri, Asad Jafri, Zeenat & Co.
2.
Urdu film
Meri Bhabhi
from Friday, 3 October 1969
Singer(s): Masood Rana, Music: Amjad Bobby, Poet: , Actor(s): (Playback - Master Murad)
3.
Urdu film
Shikar
from Friday, 23 August 1974
Singer(s): Masood Rana, Music: A. Hameed, Poet: , Actor(s): Shahid
4.
Urdu film
Shikar
from Friday, 23 August 1974
Singer(s): Masood Rana, Music: A. Hameed, Poet: , Actor(s): Shahid
5.
Urdu film
Raja Jani
from Friday, 30 January 1976
Singer(s): Masood Rana, Music: Amjad Bobby, Poet: , Actor(s): Mohammad Ali



پاکستان فلم میگزین ۔۔۔ سنہری فلمی یادوں کا امین

پاکستان فلم میگزین ، پاکستانی فلموں ، فنکاروں ، گیتوں اور اہم فلمی معلومات پر مبنی انٹرنیٹ پر اپنی نوعیت کی اولین ، منفرد اور تاریخ ساز ویب سائٹ ہے جو 3 مئی 2000ء سے مسلسل اپ ڈیٹ ہورہی ہے۔ یہ ایک انفرادی کاوش ہے جو فارغ اوقات کا بہترین مشغلہ اور پاکستان کی فلمی تاریخ کو مرتب کرنے کا ایک انوکھا مشن بھی ہے۔

A website of Masood Rana

یہ بے مثل ویب سائٹ کبھی نہ بن پاتی اگر پاکستانی فلموں میں میرے آل ٹائم فیورٹ پلے بیک سنگر جناب مسعودرانا صاحب کے گیت نہ ہوتے۔ انھی کے گیتوں کی تلاش میں یہ عظیم الشان ویب سائٹ وجود میں آئی۔ 2020ء سے اس عظیم فنکار کی 25ویں برسی پر ایک ایسا شاندار خراج تحسین پیش کیا جارہا ہے کہ جو آج تک کبھی کسی دوسرے فنکار کو پیش نہیں کیا جا سکا۔ مسعودرانا کے ایک ہزار سے زائد فلمی گیتوں کے اردو/پنجابی ڈیٹابیس کے علاوہ ان کے ساتھی فنکاروں پر بھی بڑے تفصیلی معلوماتی مضامین لکھے جارہے ہیں۔ یہ سلسلہ اپنی تکمیل تک جاری رہے گا ، ان شاء اللہ۔۔!

ندیم
ندیم
صبیحہ خانم
صبیحہ خانم
شاہد
شاہد
آغا حسینی
آغا حسینی
اختریوسف
اختریوسف
بھائیا اے حمید
بھائیا اے حمید
مالا
مالا
حزیں قادری
حزیں قادری
سلیم رضا
سلیم رضا
شباب کیرانوی
شباب کیرانوی
سید کمال
سید کمال
مہدی حسن
مہدی حسن
حبیب جالب
حبیب جالب
ابو شاہ
ابو شاہ
مصلح الدین
مصلح الدین
نسیمہ شاہین
نسیمہ شاہین
منیر حسین
منیر حسین
ماسٹر عنایت حسین
ماسٹر عنایت حسین
جی اے چشتی
جی اے چشتی
حسن طارق
حسن طارق
مسعودپرویز
مسعودپرویز
حمایت علی شاعر
حمایت علی شاعر
شبانہ
شبانہ
الیاس کاشمیری
الیاس کاشمیری
عمرشریف
عمرشریف
زلفی
زلفی
صہبااختر
صہبااختر
ساقی
ساقی
طفیل ہوشیارپوری
طفیل ہوشیارپوری
افضل خان
افضل خان
ماسٹر مراد
ماسٹر مراد
ساحل فارانی
ساحل فارانی
اعظم چشتی
اعظم چشتی
طالش
طالش
رفیق رضوی
رفیق رضوی
سیما
سیما
رضا میر
رضا میر
ناشاد
ناشاد
نذر
نذر
نذیرعلی
نذیرعلی
سنگیتا
سنگیتا
نذیر
نذیر
خواجہ خورشید انور
خواجہ خورشید انور
اسلم ڈار
اسلم ڈار
ملکہ ترنم نور جہاں
ملکہ ترنم نور جہاں
ماسٹر تصدق حسین
ماسٹر تصدق حسین
ارشدکاظمی
ارشدکاظمی
رشید عطرے
رشید عطرے
غزالہ
غزالہ
سلیم کاشر
سلیم کاشر
خلیفہ نذیر
خلیفہ نذیر
کلیم عثمانی
کلیم عثمانی
تسلیم فاضلی
تسلیم فاضلی
سلمیٰ ممتاز
سلمیٰ ممتاز
اے حمید
اے حمید
محمد رفیع
محمد رفیع
شوکت علی
شوکت علی
ایم جے رانا
ایم جے رانا
ظہیرریحان
ظہیرریحان
تانی
تانی
کے خورشید
کے خورشید
اسد بخاری
اسد بخاری
ایم اکرم
ایم اکرم
نرالا
نرالا
فردوس
فردوس
وحیدڈار
وحیدڈار
ایم صادق
ایم صادق
دلجیت مرزا
دلجیت مرزا
آصف جاہ
آصف جاہ
منظورجھلا
منظورجھلا
افتخارخان
افتخارخان
رضیہ
رضیہ
تصورخانم
تصورخانم
سنتوش کمار
سنتوش کمار
سرور بارہ بنکوی
سرور بارہ بنکوی
حیدر چوہدری
حیدر چوہدری
مشیر کاظمی
مشیر کاظمی
مظفروارثی
مظفروارثی
ماسٹر عبد اللہ
ماسٹر عبد اللہ
ریاض شاہد
ریاض شاہد
اقبال کاشمیری
اقبال کاشمیری
منیر نیازی
منیر نیازی
الطاف حسین
الطاف حسین
سعیدگیلانی
سعیدگیلانی
روبینہ بدر
روبینہ بدر
شریف نیر
شریف نیر
بخشی وزیر
بخشی وزیر
امجدبوبی
امجدبوبی
نورمحمدچارلی
نورمحمدچارلی
فیاض ہاشمی
فیاض ہاشمی
ریاض احمد راجو
ریاض احمد راجو
سلونی
سلونی
مسرور انور
مسرور انور
رشیداختر
رشیداختر
رونا لیلیٰ
رونا لیلیٰ
ایم اے رشید
ایم اے رشید
ناصرہ
ناصرہ
اطہر شاہ خان
اطہر شاہ خان
اعظم بیگ
اعظم بیگ
قوی
قوی
رنگیلا
رنگیلا
زینت
زینت
غلام نبی ، عبداللطیف
غلام نبی ، عبداللطیف
جعفر بخاری
جعفر بخاری
اقبال شہزاد
اقبال شہزاد
عنایت حسین بھٹی
عنایت حسین بھٹی
کمار
کمار
شیون رضوی
شیون رضوی
یوسف خان
یوسف خان
سدھیر
سدھیر
منوررشید
منوررشید
فیروز نظامی
فیروز نظامی
سیف الدین سیف
سیف الدین سیف
نذیرجعفری
نذیرجعفری
آسیہ
آسیہ
خواجہ سرفراز
خواجہ سرفراز
موج لکھنوی
موج لکھنوی
دیبا
دیبا
ریاض احمد
ریاض احمد
نبیلہ
نبیلہ
طارق عزیز
طارق عزیز
اے شاہ
اے شاہ
روزینہ
روزینہ
جمیل اختر
جمیل اختر
ایس اے بخاری
ایس اے بخاری
نذرالاسلام
نذرالاسلام
ناہید
ناہید
روبن گھوش
روبن گھوش
شیریں
شیریں
آغا جی اے گل
آغا جی اے گل
طافو
طافو
ماسٹر عاشق حسین
ماسٹر عاشق حسین
قدیرغوری
قدیرغوری
اخترحسین اکھیاں
اخترحسین اکھیاں
ننھا
ننھا
رانی
رانی
نیلو
نیلو
آئٹم گرلز
آئٹم گرلز
امین ملک
امین ملک
طلعت صدیقی
طلعت صدیقی
لیلیٰ
لیلیٰ
اسماعیل متوالا
اسماعیل متوالا
ایم اسماعیل
ایم اسماعیل
نسیم بیگم
نسیم بیگم
سلیم اقبال
سلیم اقبال
نگہت سیما
نگہت سیما
رخسانہ
رخسانہ
آئرن پروین
آئرن پروین
فضل حسین
فضل حسین
علی حسین
علی حسین
ایس ایم یوسف
ایس ایم یوسف
علی اعجاز
علی اعجاز
صفدرحسین
صفدرحسین
نغمہ
نغمہ
وارث لدھیانوی
وارث لدھیانوی
احتشام ، مستفیض
احتشام ، مستفیض
یاسمین
یاسمین
ایم ایس ڈار
ایم ایس ڈار
خواجہ پرویز
خواجہ پرویز
شبنم
شبنم
شمیم آرا
شمیم آرا
نثار بزمی
نثار بزمی
حیدر
حیدر
ظہورناظم
ظہورناظم
حسن لطیف
حسن لطیف
اقبال حسن
اقبال حسن
سائیں اختر
سائیں اختر
آصف جاوید
آصف جاوید
اسلم ایرانی
اسلم ایرانی
ایم سلیم
ایم سلیم
طفیل فاروقی
طفیل فاروقی
حسنہ
حسنہ
بابا عالم سیاہ پوش
بابا عالم سیاہ پوش
عالیہ
عالیہ
ظہیر کاشمیری
ظہیر کاشمیری
سلطان راہی
سلطان راہی
دیبو بھٹا چاریہ
دیبو بھٹا چاریہ
لقمان
لقمان
خلیل احمد
خلیل احمد
ایس سلیمان
ایس سلیمان
حسن عسکری
حسن عسکری
کمال احمد
کمال احمد
ساون
ساون
احمد راہی
احمد راہی
سہیل رعنا
سہیل رعنا
خلیل قیصر
خلیل قیصر
سیف چغتائی
سیف چغتائی
احمد رشدی
احمد رشدی
کریم شہاب الدین
کریم شہاب الدین
درپن
درپن
حمیدچوہدری
حمیدچوہدری
قتیل شفائی
قتیل شفائی
حامدعلی بیلا
حامدعلی بیلا
ماسٹر رفیق علی
ماسٹر رفیق علی
مظہر شاہ
مظہر شاہ
اکمل
اکمل
البیلا
البیلا
لال محمد اقبال
لال محمد اقبال
محمد علی
محمد علی
نسیمہ خان
نسیمہ خان
وجاہت عطرے
وجاہت عطرے
رحمان ورما
رحمان ورما
تنویر نقوی
تنویر نقوی
ریاض الرحمان ساغر
ریاض الرحمان ساغر
پرویز ملک
پرویز ملک
کیفی
کیفی
منورظریف
منورظریف
علاؤالدین
علاؤالدین
ایم اشرف
ایم اشرف
انورکمال پاشا
انورکمال پاشا
لہری
لہری
اعجاز
اعجاز
غلام حسین شبیر
غلام حسین شبیر
حبیب
حبیب
زیبا
زیبا
راجہ حفیظ
راجہ حفیظ
وحیدمراد
وحیدمراد
مشتاق علی
مشتاق علی
عزیز میرٹھی
عزیز میرٹھی
حنیف
حنیف
نذیر بیگم
نذیر بیگم
شوکت حسین رضوی
شوکت حسین رضوی
امداد حسین
امداد حسین
الحامد
الحامد
وزیر افضل
وزیر افضل
اکبرعلی اکو
اکبرعلی اکو
سلطان محمود آشفتہ
سلطان محمود آشفتہ
مسرت نذیر
مسرت نذیر
خان عطا الرحمان
خان عطا الرحمان



PAK Magazine is an individual effort to compile and preserve the Pakistan's political, film and media history.
All external links on this site are only for the informational and educational purposes, and therefor, I am not responsible for the content of any external site.