PAK Magazine
Saturday, 03 December 2022, Week: 48

Pakistan Chronological History
Annual
Annual
Monthly
Monthly
Weekly
Weekly
Daily
Daily
Alphabetically
Alphabetically


2007
بے نظیر بھٹوکا قتل
بے نظیر بھٹوکا قتل
1992
موٹر ویز
موٹر ویز
1978
جنرل ضیاع صدر بنا
جنرل ضیاع صدر بنا
2022
وزیراعظم شہباز شریف
وزیراعظم شہباز شریف
1951
ملک غلام محمد ، گورنر جنر ل بنے
ملک غلام محمد ، گورنر جنر ل بنے


2022

No conspiracy by USA

Thursday, 14 April 2022

There is not any conspiracy against Imran Khan by USA, said Army spokesperson..

عمران خان کا بیانیہ دفن

جمعرات 14 اپریل 2022
میجر جنرل بابر افتخار کی پریس کانفرنس
میجر جنرل بابر افتخار کی پریس کانفرنس

فوجی ترجمان میجرجنرل بابر افتخار نے 14 اپریل 2022ء کو سابق وزیراعظم عمران خان کے حالیہ بیانئے کو دفن کرتے ہوئے بتایا کہ پاکستان کے خلاف کوئی امریکی سازش ہوئی نہ امریکہ نے کوئی فوجی اڈہ مانگا۔ انھوں نے ایٹمی اثاثوں کو موضوع بحث بنانے پر اعتراض کیا اور سوشل میڈیا پر گردش کرتے ہوئے ریٹائرڈ فوجی افسران کے جعلی آڈیو پیغامات پر تشویش کا اظہار بھی کیا۔ انھوں نے یہ یقین دھانی بھی کروائی کہ پاکستان میں کبھی مارشل لاء نہیں لگے گا اور جمہوریت ہی پاکستان کے مسائل کا حل ہے۔ انھوں نے نئی حکومت کے قیام پر سٹاک مارکیٹ کی بہتری کی طرف بھی اشارہ کیا۔

فوج اور سیاست

جنرل پرویز باجوہ
جنرل پرویز باجوہ

جنرل صاحب کا یہ بیان خاص طور پر دلچسپی کا حامل تھا کہ فوج کا سیاست سے کوئی تعلق نہیں ہے اور نہ ہی انھیں سیاست میں گھسیٹا جائے۔ ساتھ ہی انھوں نے یہ بھی بتادیا کہ بحران کے حل کے لیے وزیراعظم عمران خان کے کہنے پر آرمی چیف کی ان سے اور اپوزیشن سے ملاقاتیں ہوئیں اور تین آپشنز پر بات ہوئی تھی کہ وہ استعفیٰ دے دیں ، تحریک عدم اعتماد کا سامنا کریں یا نئے انتخابات کروا دیں۔ ان میں چوتھا آپشن نہیں تھا کہ آپ اپنے عہدے پر برقرار رہیں اور یہ کہ ہم آپ کے ساتھ ہیں۔۔!

پاک فوج ، پاکستان کا ایک انتہائی معتبر اور مقدس ادارہ ہے جو کسی طور پر بھی متنازعہ نہیں ہونا چاہئے۔ کوئی پاکستانی اپنی فوج کے خلاف نہیں ہو سکتا اور نہ ہی ملکی دفاع اور سلامتی پر کوئی سمجھوتہ ہو سکتا ہے۔ لیکن یہ بھی ایک تلخ حقیقت ہے کہ اس مقدس ادارے کی آڑ میں جن مفاد پرست اور آئین شکن جرنیلوں نے ماضی میں اس ملک و قوم کے ساتھ زیادتیاں کی ہیں ، وہ ناقابل معافی جرم ہیں۔ پاکستان کو آج تک جتنا نقصان فوجی آمروں نے پہنچایا ہے ، اس کا عشر عشیر بھی کبھی کسی سیاسی حکومت نے نہیں پہنچایا۔

عمران خان کی نااہلی

عمران خان جیسے ایک انتہائی نالائق ، احمق اور بدزبان شخص کو وزیراعظم بنانے والوں نے اس قوم کے ساتھ بہت بڑا ظلم کیا تھا۔ یہ شخص کسی طور بھی وزرات عظمیٰ کے منصب کا اہل نہیں تھا ، زیادہ سے زیادہ ، کرکٹ بورڈ کا چیئر مین بنایا جا سکتا تھا۔ گو عمران خان کی مقبولیت کسی شک و شہبہ سے بالاتر ہے لیکن اس میں سیاسی قابلیت دور دور تک نہیں ہے۔ اب یہ ایک پریشر گروپ کی شکل میں سامنے آئے گا اور اپنے حامیوں کو مزید بے وقوف بنائے گا لیکن امپائر کی مدد کے بغیر کامیابی آسان نہیں ہوگی۔ ڈر ہے کہ انتہائی صورت میں اس کا انجام بھی بھٹو اور بے نظیر والا نہ ہو۔۔!

عمران حکومت کی کارکردگی

عمران خان ، پاکستان کی تاریخ کے نااہل ترین وزیراعظم ثابت ہوئے۔ ان کے فاشسٹ دور حکومت میں ہر شعبے میں جتنی تباہی ہوئی ، وہ پہلے کبھی دیکھنے میں نہیں آئی۔ گو ایک عام آدمی کے لیے مہنگائی ہر دور میں رہی ہے لیکن عمران دور میں ریکارڈ 15 فیصد اضافہ ہوا ، بیروزگاری تین گنا بڑھی جس سے غربت ساڑھے پانچ کروڑ سے پونے آٹھ کروڑ تک جا پہنچی۔ افراط زر 17 فیصد تک جاپہنچی اور تجارتی خسارہ ریکارڈ 43 ارب ڈالر تک جا پہنچا۔ غیرملکی قرضہ تین نیل سے پانچ نیل ہوا ، ڈالر 125 سے 190 تک پہنچا۔ کرپشن میں پاکستان 117 سے 140 نمبر پر جا پہنچا۔ ان کے علاوہ خارجہ پالیسی کو ناقابل تلافی نقصان پہنچا۔ چین ، سعودی عرب اور قطر جیسے روایتی دوستوں سے تعلقات کشیدہ ہوئے اور امریکہ سے مفت میں پنگا لیا۔ کشمیر ہاتھ سے نکل گیا اور کچھ بھی نہ کیا جاسکا۔ ملک میں اپوزیشن کے ساتھ معاندانہ رویہ رکھا گیا اور انتقامی کاروائیوں سے انھیں ہراساں کیا گیا۔ پریس کا گلا گھونٹا گیا اور مخالفین کو جیلوں میں ڈالا گیا۔ عمران خان کی نااہلیوں کی داستان مندرجہ ذیل اعدادوشمار میں بھی نظر آتی ہے:

عمران حکومت کی کارکردگی
عمران حکومت کا نون لیگ کی حکومت سے کارکردگی میں موازنہ
روزنامہ امت کراچی





No conspiracy by USA (video)

Credit: Geo News

فوجی ترجمان میجر جنرل بابر افتخار ایک پریس کانفرنس میں حالیہ سیاسی صورتحال پر بات کررہے ہیں۔

1968
تربیلا ڈیم
تربیلا ڈیم
2020
لاہور میٹرو
لاہور میٹرو
1993
فاروق احمد لغاری ، صدر بنے
فاروق احمد لغاری ، صدر بنے
1949
قرار داد مقاصد
قرار داد مقاصد
1971
بھٹو کی پہلی کابینہ
بھٹو کی پہلی کابینہ

تاریخ پاکستان

پاک میگزین ، پاکستانی تاریخ پر اردو میں ایک منفرد ویب سائٹ ہے جس پر اہم تاریخی واقعات کو بتاریخ سالانہ ، ماہانہ ، ہفتہ وارانہ ، روزانہ اور حروفانہ ترتیب سے چند کلکس کے نیچے پیش کیا گیا ہے۔ علاوہ ازیں اہم ترین واقعات اور شخصیات پر تاریخی اور مستند معلومات پر مخصوص صفحات ترتیب دیے گئے ہیں جہاں تصویر و تحریر ، ویڈیو اور دیگر متعلقہ مواد کی صورت میں محفوظ کیا گیا ہے۔ یہ سلسلہ ایک انفرادی کاوش اور فارغ اوقات کا بہترین مشغلہ ہے جو اپنی تکمیل تک جاری و ساری رہے گا ، ان شاء اللہ۔۔!



تاریخ پاکستان ، اہم موضوعات
تحریک پاکستان
تحریک پاکستان
جغرافیائی تاریخ
جغرافیائی تاریخ
سقوط ڈھاکہ
سقوط ڈھاکہ
شہ سرخیاں
شہ سرخیاں
سیاسی ڈائری
سیاسی ڈائری
قائد اعظمؒ
قائد اعظمؒ
ذوالفقار علی بھٹوؒ
ذوالفقار علی بھٹوؒ
بے نظیر بھٹو
بے نظیر بھٹو
نواز شریف
نواز شریف
عمران خان
عمران خان
سکندرمرزا
سکندرمرزا
جنرل ایوب
جنرل ایوب
جنرل یحییٰ
جنرل یحییٰ
جنرل ضیاع
جنرل ضیاع
جنرل مشرف
جنرل مشرف
صدر
صدر
وزیر اعظم
وزیر اعظم
آرمی چیف
آرمی چیف
چیف جسٹس
چیف جسٹس
انتخابات
انتخابات
امریکی امداد
امریکی امداد
مغلیہ سلطنت
مغلیہ سلطنت
ڈنمارک
ڈنمارک
اٹلی کا سفر
اٹلی کا سفر
حج بیت اللہ
حج بیت اللہ
سیف الملوک
سیف الملوک
شعر و شاعری
شعر و شاعری
ہیلتھ میگزین
ہیلتھ میگزین
فلم میگزین
فلم میگزین
میڈیا لنکس
میڈیا لنکس

پاکستان کے بارے میں اہم معلومات

Pakistan

چند اہم بیرونی لنکس


پاکستان کی فلمی تاریخ

پاکستانی فلموں ، فنکاروں اور فلمی گیتوں پر ایک منفرد اور معلوماتی سلسلہ

مشیر کاظمی
مشیر کاظمی
احتشام ، مستفیض
احتشام ، مستفیض
قدیرغوری
قدیرغوری
کریم شہاب الدین
کریم شہاب الدین
رفیق رضوی
رفیق رضوی


PAK Magazine is an individual effort to compile and preserve the Pakistan's political, film and media history.
All external links on this site are only for the informational and educational purposes, and therefor, I am not responsible for the content of any external site.