PAK Magazine | An Urdu website on the Pakistan history
Thursday, 30 May 2024, Day: 151, Week: 22

PAK Magazine |  پاک میگزین پر تاریخِ پاکستان ، ایک منفرد انداز میں


پاک میگزین پر تاریخِ پاکستان

Annual
Monthly
Weekly
Daily
Alphabetically

بدھ 13 جنوری 1932

سکھر بیراج

سکھر بیراج
سکھر بیراج 1932ء میں بنا تھا

سکھر بیراج ، پاکستان میں نہری پانی سے آب پاشی کا سب سے بڑا نظام ہے۔۔!

دریائے سندھ پر بنائے جانے والے سکھر بیراج سے سات نہریں نکالی گئی ہیں جن کی مجموعی لمبائی 6.473 میل ہے اور ان سے 59 لاکھ ایکڑ کا زرعی رقبہ سیراب ہوتا ہے۔

بیراج کے بائیں طرف چار نہریں ، نارا کینال ، میرواہی کینال ، روہڑی کینال اور ابو واہ کینال ہیں جو سندھ کے 12 اضلاع یعنی سکھر، خیرپور، نوشہرو فیروز، نوابشاہ، سانگھڑ، میرپورخاص، بدین، حیدرآباد، ٹنڈو محمد خان، ٹنڈوالہ یار اور تھرپار کے علاقوں کو سیراب کرتی ہیں۔

دائیں طرف دادو کینال اور رائس کینال ہیں جو لاڑکانہ ، شکارپور اور دادو وغیرہ کے علاقوں کو پانی فراہم کرتی ہیں جبکہ بلوچستان کے ضلع ڈیرہ مراد جمالی کو سیراب کرنے والی کھیرتھر کینال بھی ہے۔

دنیا کا سب سے بڑا نہری نظام

صوبہ پنجاب کی طرح صوبہ سندھ میں بھی زیر زمین پانی کی کمی کی وجہ سے زراعت کے لیے آب پاشی کا دارومدار بارشوں کے علاوہ دریائی پانی پر ہوتا تھا جو ہر جگہ دستیاب نہ تھا۔

انگریز راج میں دنیا کا سب سے بڑا نہری نظام بنا جو خوش قسمتی سے پاکستان کے حصے میں آیا۔ 1871ء میں انگریز سرکار نے سندھ ٹرپل پراجیکٹ کی تجویز دی جو سکھر، گدو اور کوٹری میں بننے والے عظیم بیراجوں کی صورت میں سامنے آئی تھی۔

اسی سلسلے میں بمبئی کے گورنر جارج لائیڈ نے 24 اکتوبر 1923ء کو Lloyd Barrage کا سنگ بنیاد رکھا تھا جس کی تعمیر 9 برس میں مکمل ہوئی تھی۔ 13 جنوری 1932ء کو وائسرائے اور گورنر جنرل لارڈ ولنگڈن نے اس منصوبے کا افتتاح کیا جس پر کل لاگت اس وقت کا 20 کروڑ روپیہ آئی تھی۔ لائیڈ بیراج کو سکھر بیراج کا نام قیام پاکستان کے بعد دیا گیا تھا۔

سندھ پر انگریزوں کا قبضہ کب ہوا؟

یاد رہے کہ 1843ء میں دوبے کے مقام پر انگریزوں نے تالپور حکمرانوں کو شکست دے کر سندھ پر قبضہ کیا تھا۔ Charles James Napier کو سندھ کا پہلا گورنر مقرر کیا گیا اور کراچی کو دارالخلافہ بنایا گیا تھا۔ 1847ء میں سندھ کی علیحدہ حیثیت ختم کر کے اسے بمبئی میں شامل کر دیا گیا تھا۔ 1936ء میں سندھ کو الگ صوبے کی حیثیت دی گئی تھی۔

سکھر بیراج





Sukkur Barrage

Wednesday, 13 January 1932

Sukkur Barrage or Lloyd Barrage in Pakistan was built from 1923 to 1932, which is the largest single irrigation network of its kind in the world.


Sukkur Barrage (video)

Credit: British Movietone



پاکستان کی تاریخ پر ایک منفرد ویب سائٹ

پاک میگزین ، پاکستان کی سیاسی تاریخ پر ایک منفرد ویب سائٹ ہے جس پر سال بسال اہم ترین تاریخی واقعات کے علاوہ اہم شخصیات پر تاریخی اور مستند معلومات پر مبنی مخصوص صفحات بھی ترتیب دیے گئے ہیں جہاں تحریروتصویر ، گرافک ، نقشہ جات ، ویڈیو ، اعدادوشمار اور دیگر متعلقہ مواد کی صورت میں حقائق کو محفوظ کرنے کی کوشش کی جارہی ہے۔

2017ء میں شروع ہونے والا یہ عظیم الشان سلسلہ، اپنی تکمیل تک جاری و ساری رہے گا، ان شاءاللہ



پاکستان کے اہم تاریخی موضوعات



تاریخِ پاکستان کی اہم ترین شخصیات



تاریخِ پاکستان کے اہم ترین سنگِ میل



پاکستان کی اہم معلومات

Pakistan

چند مفید بیرونی لنکس



پاکستان فلم میگزین

پاک میگزین" کے سب ڈومین کے طور پر "پاکستان فلم میگزین"، پاکستانی فلمی تاریخ، فلموں، فنکاروں اور فلمی گیتوں پر انٹرنیٹ کی تاریخ کی پہلی اور سب سے بڑی ویب سائٹ ہے جو 3 مئی 2000ء سے مسلسل اپ ڈیٹ ہورہی ہے۔


پاکستانی فلموں کے 75 سال …… فلمی ٹائم لائن …… اداکاروں کی ٹائم لائن …… گیتوں کی ٹائم لائن …… پاکستان کی پہلی فلم تیری یاد …… پاکستان کی پہلی پنجابی فلم پھیرے …… پاکستان کی فلمی زبانیں …… تاریخی فلمیں …… لوک فلمیں …… عید کی فلمیں …… جوبلی فلمیں …… پاکستان کے فلم سٹوڈیوز …… سینما گھر …… فلمی ایوارڈز …… بھٹو اور پاکستانی فلمیں …… لاہور کی فلمی تاریخ …… پنجابی فلموں کی تاریخ …… برصغیر کی پہلی پنجابی فلم …… فنکاروں کی تقسیم ……

پاک میگزین کی پرانی ویب سائٹس

"پاک میگزین" پر گزشتہ پچیس برسوں میں مختلف موضوعات پر مستقل اہمیت کی حامل متعدد معلوماتی ویب سائٹس بنائی گئیں جو موبائل سکرین پر پڑھنا مشکل ہے لیکن انھیں موبائل ورژن پر منتقل کرنا بھی آسان نہیں، اس لیے انھیں ڈیسک ٹاپ ورژن کی صورت ہی میں محفوظ کیا گیا ہے۔

پاک میگزین کا تعارف

"پاک میگزین" کا آغاز 1999ء میں ہوا جس کا بنیادی مقصد پاکستان کے بارے میں اہم معلومات اور تاریخی حقائق کو آن لائن محفوظ کرنا ہے۔

Old site mazhar.dk

یہ تاریخ ساز ویب سائٹ، ایک انفرادی کاوش ہے جو 2002ء سے mazhar.dk کی صورت میں مختلف موضوعات پر معلومات کا ایک گلدستہ ثابت ہوئی تھی۔

اس دوران، 2011ء میں میڈیا کے لیے akhbarat.com اور 2016ء میں فلم کے لیے pakfilms.net کی الگ الگ ویب سائٹس بھی بنائی گئیں لیکن 23 مارچ 2017ء کو انھیں موجودہ اور مستقل ڈومین pakmag.net میں ضم کیا گیا جس نے "پاک میگزین" کی شکل اختیار کر لی تھی۔

سالِ رواں یعنی 2024ء کا سال، "پاک میگزین" کی مسلسل آن لائن اشاعت کا 25واں سلور جوبلی سال ہے۔




PAK Magazine is an individual effort to compile and preserve the Pakistan history online.
All external links on this site are only for the informational and educational purposes and therefor, I am not responsible for the content of any external site.