PAK Magazine | An Urdu website on the Pakistan history
Tuesday, 25 June 2024, Day: 177, Week: 26

PAK Magazine |  پاک میگزین پر تاریخِ پاکستان ، ایک منفرد انداز میں


پاک میگزین پر تاریخِ پاکستان

Annual
Monthly
Weekly
Daily
Alphabetically

جمعتہ المبارک 9 مارچ 1951

پاکستان میں پہلی فوجی بغاوت

نوابزادہ لیاقت علی خان
نوابزادہ لیاقت علی خان

پاکستان میں "راولپنڈی سازش کیس" پہلی فوجی بغاوت تھی جس کا انکشاف سرکاری طور پر خود وزیراعظم خان لیاقت علی خان نے کیا تھا۔ اس بارے میں 9 مارچ 1951ء کو دیا گیا ان کا مکمل بیان حسب ذیل ہے:

    "ابھی ، ذرا دیر پہلے ، پاکستان کے دشمنوں کی ایک سازش پکڑی گئی ہے جس کا مقصد یہ تھا کہ تشدد کے ذریعے ملک میں انتشار اور افراتفری پھیلائی جائے اور اس مقصد کی خاطر افواجِ پاکستان کی وفادری کو بھی ملیامیٹ کر دیا جائے۔

    حکومتِ پاکستان کو ان ناپاک ارادوں کا بروقت علم ہوا چنانچہ اس سازش کے سرغنوں کی گرفتاری آج ہی عمل میں آئی ہے۔ یہ ہیں:

  • افواج پاکستان کے چیف آف جنرل سٹاف میجر جنرل اکبر خان اور ان کی بیگم
  • بریگیڈیئر کمانڈر متعین کوئٹہ بریگیڈ ایم اے لطیف اور
  • انگریزی اخبار پاکستان ٹائمز کے ایڈیٹر فیض احمد فیض
  • سازش میں ملوث دونوں فوجی افسروں کو ملازمت سے فوری طور پر برخاست کر دیا گیا ہے۔ اس سے پہلے کہ سازش کی جڑیں مستحکم ہوتیں، یہ ہماری خوش نصیبی ہے کہ ہمیں اس کا بروقت علم ہو گیا۔ مجھے یقین ہے کہ اس سازش کے بارے میں سن کر جس طرح مجھے بےحد صدمہ پہنچا ہے، اسی طرح عوام کو بھی شدید رنج ہو گا۔

    ہم عوامی معاملات کی اس نزاکت کو پوری طرح محسوس کرتے ہیں لیکن قومی سلامتی کے نازک معاملات کی وجہ سے میرے لیے اس سازش میں ملوث لوگوں کے بارے میں تفصیلات کا سر عام اعلان کرنا ممکن نہیں۔ محض اس قدر بتا دینا کافی ہو گا کہ یہ لوگ اگر کامیاب ہو جاتے تو ان کی کارستانی سے ملکی سلامتی خطرے میں پڑ جاتی۔

    افواج پاکستان کے دو اعلیٰ عہدیداروں کے خلاف سنگین کارروائی کرتے ہوئے مجھے جتنا شدید صدمہ پہنچا ہے ، میں اس کو چھپانا نہیں چاہتا لیکن موجودہ صورت حال میں چونکہ پاکستان کی سلامتی اور دفاع کو شدید خطرے میں ڈال دیا گیا ہے ، لہذا میں نے یہ محسوس کیا کہ پاکستان کے وزیر اعظم اور وزیر دفاع ہونے کی حیثیت سے قوم کو بروقت باخبر کروں۔"

وزیراعظم خان لیاقت علی خان کا یہ پورا بیان اس سازش میں شریک کم عمر ترین کیپٹن ظفر اللہ پوشنی کی کتاب ”زندگی زنداں دلی کا نام ہے“ (انگریزی ترجمہ: Prison Interlude) سے ماخوذ ہے۔ وہ خود اس سازش کیس کے ایک ملزم تھے جنھیں 15 مئی 1951 کو حراست میں لیا گیا تھا۔ پوشنی صاحب نے 95 سال کی عمر پائی اور 6 اکتوبر 2021ء کو انتقال ہوا تھا۔

پاکستان میں پہلی فوجی بغاوت





First Military Coup attempt in Pakistan

Friday, 9 March 1951

Rawalpindi Conspiracy Case was first attempted coup d'état against Prime minister Liaquat Ali Khan in 1951..




پاکستان کی تاریخ پر ایک منفرد ویب سائٹ

پاک میگزین ، پاکستان کی سیاسی تاریخ پر ایک منفرد ویب سائٹ ہے جس پر سال بسال اہم ترین تاریخی واقعات کے علاوہ اہم شخصیات پر تاریخی اور مستند معلومات پر مبنی مخصوص صفحات بھی ترتیب دیے گئے ہیں جہاں تحریروتصویر ، گرافک ، نقشہ جات ، ویڈیو ، اعدادوشمار اور دیگر متعلقہ مواد کی صورت میں حقائق کو محفوظ کرنے کی کوشش کی جارہی ہے۔

2017ء میں شروع ہونے والا یہ عظیم الشان سلسلہ، اپنی تکمیل تک جاری و ساری رہے گا، ان شاءاللہ



پاکستان کے اہم تاریخی موضوعات



تاریخِ پاکستان کی اہم ترین شخصیات



تاریخِ پاکستان کے اہم ترین سنگِ میل



پاکستان کی اہم معلومات

Pakistan

چند مفید بیرونی لنکس



پاکستان فلم میگزین

پاک میگزین" کے سب ڈومین کے طور پر "پاکستان فلم میگزین"، پاکستانی فلمی تاریخ، فلموں، فنکاروں اور فلمی گیتوں پر انٹرنیٹ کی تاریخ کی پہلی اور سب سے بڑی ویب سائٹ ہے جو 3 مئی 2000ء سے مسلسل اپ ڈیٹ ہورہی ہے۔


پاکستانی فلموں کے 75 سال …… فلمی ٹائم لائن …… اداکاروں کی ٹائم لائن …… گیتوں کی ٹائم لائن …… پاکستان کی پہلی فلم تیری یاد …… پاکستان کی پہلی پنجابی فلم پھیرے …… پاکستان کی فلمی زبانیں …… تاریخی فلمیں …… لوک فلمیں …… عید کی فلمیں …… جوبلی فلمیں …… پاکستان کے فلم سٹوڈیوز …… سینما گھر …… فلمی ایوارڈز …… بھٹو اور پاکستانی فلمیں …… لاہور کی فلمی تاریخ …… پنجابی فلموں کی تاریخ …… برصغیر کی پہلی پنجابی فلم …… فنکاروں کی تقسیم ……

پاک میگزین کی پرانی ویب سائٹس

"پاک میگزین" پر گزشتہ پچیس برسوں میں مختلف موضوعات پر مستقل اہمیت کی حامل متعدد معلوماتی ویب سائٹس بنائی گئیں جو موبائل سکرین پر پڑھنا مشکل ہے لیکن انھیں موبائل ورژن پر منتقل کرنا بھی آسان نہیں، اس لیے انھیں ڈیسک ٹاپ ورژن کی صورت ہی میں محفوظ کیا گیا ہے۔

پاک میگزین کا تعارف

"پاک میگزین" کا آغاز 1999ء میں ہوا جس کا بنیادی مقصد پاکستان کے بارے میں اہم معلومات اور تاریخی حقائق کو آن لائن محفوظ کرنا ہے۔

Old site mazhar.dk

یہ تاریخ ساز ویب سائٹ، ایک انفرادی کاوش ہے جو 2002ء سے mazhar.dk کی صورت میں مختلف موضوعات پر معلومات کا ایک گلدستہ ثابت ہوئی تھی۔

اس دوران، 2011ء میں میڈیا کے لیے akhbarat.com اور 2016ء میں فلم کے لیے pakfilms.net کی الگ الگ ویب سائٹس بھی بنائی گئیں لیکن 23 مارچ 2017ء کو انھیں موجودہ اور مستقل ڈومین pakmag.net میں ضم کیا گیا جس نے "پاک میگزین" کی شکل اختیار کر لی تھی۔

سالِ رواں یعنی 2024ء کا سال، "پاک میگزین" کی مسلسل آن لائن اشاعت کا 25واں سلور جوبلی سال ہے۔




PAK Magazine is an individual effort to compile and preserve the Pakistan history online.
All external links on this site are only for the informational and educational purposes and therefor, I am not responsible for the content of any external site.