PAK Magazine | An Urdu website on the Pakistan history
Monday, 20 May 2024, Day: 141, Week: 21

PAK Magazine |  پاک میگزین پر تاریخِ پاکستان ، ایک منفرد انداز میں


پاک میگزین پر تاریخِ پاکستان

Annual
Monthly
Weekly
Daily
Alphabetically

منگل 16 جنوری 1979

بھٹو اور کرپشن

بھٹو پر دوسرا وہائٹ پیپر
ذوالفقار علی بھٹوؒ پر
کرپشن کا کوئی الزام نہ لگایا جا سکا!

جنرل ضیاع مردود نے بھٹو حکومت کی مالی بدعنوانیوں کے بارے میں بھی ایک وہائٹ پیپر جاری کیا گیا تھا۔۔!

بھٹو کی پھانسی سے قبل ان کی سرکاری طور پر کردارکشی کی مہم بڑے زوروشور سے جاری تھی اور پاکستان کے آئین و قانون کو پامال کر کے حکومت پر قبضہ کرنے والا غاصب و جابر حکمران ، عوام کے پہلے منتخب حکمران پر مختلف وہائٹ پیپرز شائع کر رہا تھا جن میں 16 جنوری 1979ء کا وہ قرطاس ابیض بھی شامل تھا جس میں بھٹو حکومت کی مالی بدعنوانیوں کی تفصیلات درج تھیں۔

بھٹو حکومت کی مالی بدعنوانیاں

دلچسپ بات یہ ہے کہ اس وہائٹ پیپر میں کہیں بھی بھٹو پر ذاتی کرپشن کا الزام نہیں لگایا جا سکا تھا۔ قریب ترین الزام ان کے ترجمان اخبار مساوات کے ایک بینک لون کا تھا جس کا بڑے نمایاں الفاظ میں ذکر کیا گیا تھا۔ باقی کرپشن کے بغیر تو پاکستان کبھی نہیں رہا۔ اس طرح سے تو ناقدین ، قائداعظمؒ پر بھی کرپشن کا الزام ثابت کرسکتے ہیں۔

آمر ضیاع کی مالی بدعنوانیاں

تاریخ گواہ ہے کی جتنی کرپشن آمروں نے کی ہے ، اس کا عشر عشیر بھی کبھی کسی سیاسی حکومت نے نہیں کیا۔ خود جنرل ضیاع مردود کا دورحکومت ، کرپشن کے لحاظ سے بدترین دور تھا جب امریکی ڈالروں ، ہیروئن کی ناجائز کمائی اور کلاشنکوف کے منافع بخش کاروبار کو سرکاری سرپرستی حاصل تھی۔ بڑے بڑے فوجی افسران اور قریبی ساتھیوں کو بھاری مالی فوائد ملے۔ جونیجو حکومت کی اسمبلی کو نہ صرف رشوتیں پیش کیں بلکہ ایم این اے کو ترقیاتی فنڈز کے نام پر صوابدیدی فنڈز کے نام پر کرپشن کی انتہا کر دی گئی تھی۔ حالانکہ اسمبلی ممبران کا کام ترقیاتی کام نہیں بلکہ صرف قانون سازی تھی۔ آمرمردود نے پارلیمنٹ کو بلدیاتی ادارے بنا دیا تھا جو اصل میں ایک ربڑ سٹمپ تھی۔

شاہِ ایران کی جلاوطنی

16 جنوری 1979ء کی میری روزانہ کی ڈائری میں یہ خبر بھی تھی کہ ایران کے شہنشاہ محمدرضا شاہ پہلوی کو عوامی دباؤ پر اپنا ملک چھوڑا پڑا تھا۔ یہ ایک بہت بڑی ، تاریخ ساز اور ناقابلِ یقین خبر تھی۔

تین سال قبل، ایران میں گزرے ہوئے تمام واقعات یاد آئے جب دسمبر 1976ء میں ڈنمارک سے پاکستان کے سفر کے دوران چند دن، ایران کے دارالحکومت تہران میں قیام ہوا۔ اس وقت تک وہم و گمان بھی نہیں تھا کہ دو ہزار سالہ شاہی تقریبات منانے والے اس شہنشاہ کا ایسا زوال ہوگا۔ فرانس سے آنے والے امام خمینی کا استقبال بھی یاد ہے اور ایران میں اسلامی انقلاب کے ابتدائی واقعات بھی یاد ہیں۔

بھٹو پر دوسرا وہائٹ پیپر





The second Whitepaper on Bhutto

Tuesday, 16 January 1979

Military dictator General Zia published another whitepaper on Bhutto regime..




پاکستان کی تاریخ پر ایک منفرد ویب سائٹ

پاک میگزین ، پاکستان کی سیاسی تاریخ پر ایک منفرد ویب سائٹ ہے جس پر سال بسال اہم ترین تاریخی واقعات کے علاوہ اہم شخصیات پر تاریخی اور مستند معلومات پر مبنی مخصوص صفحات بھی ترتیب دیے گئے ہیں جہاں تحریروتصویر ، گرافک ، نقشہ جات ، ویڈیو ، اعدادوشمار اور دیگر متعلقہ مواد کی صورت میں حقائق کو محفوظ کرنے کی کوشش کی جارہی ہے۔

2017ء میں شروع ہونے والا یہ عظیم الشان سلسلہ، اپنی تکمیل تک جاری و ساری رہے گا، ان شاءاللہ



پاکستان کے اہم تاریخی موضوعات



تاریخِ پاکستان کی اہم ترین شخصیات



تاریخِ پاکستان کے اہم ترین سنگِ میل



پاکستان کی اہم معلومات

Pakistan

چند مفید بیرونی لنکس



پاکستان فلم میگزین

پاک میگزین" کے سب ڈومین کے طور پر "پاکستان فلم میگزین"، پاکستانی فلمی تاریخ، فلموں، فنکاروں اور فلمی گیتوں پر انٹرنیٹ کی تاریخ کی پہلی اور سب سے بڑی ویب سائٹ ہے جو 3 مئی 2000ء سے مسلسل اپ ڈیٹ ہورہی ہے۔


پاکستانی فلموں کے 75 سال …… فلمی ٹائم لائن …… اداکاروں کی ٹائم لائن …… گیتوں کی ٹائم لائن …… پاکستان کی پہلی فلم تیری یاد …… پاکستان کی پہلی پنجابی فلم پھیرے …… پاکستان کی فلمی زبانیں …… تاریخی فلمیں …… لوک فلمیں …… عید کی فلمیں …… جوبلی فلمیں …… پاکستان کے فلم سٹوڈیوز …… سینما گھر …… فلمی ایوارڈز …… بھٹو اور پاکستانی فلمیں …… لاہور کی فلمی تاریخ …… پنجابی فلموں کی تاریخ …… برصغیر کی پہلی پنجابی فلم …… فنکاروں کی تقسیم ……

پاک میگزین کی پرانی ویب سائٹس

"پاک میگزین" پر گزشتہ پچیس برسوں میں مختلف موضوعات پر مستقل اہمیت کی حامل متعدد معلوماتی ویب سائٹس بنائی گئیں جو موبائل سکرین پر پڑھنا مشکل ہے لیکن انھیں موبائل ورژن پر منتقل کرنا بھی آسان نہیں، اس لیے انھیں ڈیسک ٹاپ ورژن کی صورت ہی میں محفوظ کیا گیا ہے۔

پاک میگزین کا تعارف

"پاک میگزین" کا آغاز 1999ء میں ہوا جس کا بنیادی مقصد پاکستان کے بارے میں اہم معلومات اور تاریخی حقائق کو آن لائن محفوظ کرنا ہے۔

Old site mazhar.dk

یہ تاریخ ساز ویب سائٹ، ایک انفرادی کاوش ہے جو 2002ء سے mazhar.dk کی صورت میں مختلف موضوعات پر معلومات کا ایک گلدستہ ثابت ہوئی تھی۔

اس دوران، 2011ء میں میڈیا کے لیے akhbarat.com اور 2016ء میں فلم کے لیے pakfilms.net کی الگ الگ ویب سائٹس بھی بنائی گئیں لیکن 23 مارچ 2017ء کو انھیں موجودہ اور مستقل ڈومین pakmag.net میں ضم کیا گیا جس نے "پاک میگزین" کی شکل اختیار کر لی تھی۔

سالِ رواں یعنی 2024ء کا سال، "پاک میگزین" کی مسلسل آن لائن اشاعت کا 25واں سلور جوبلی سال ہے۔




PAK Magazine is an individual effort to compile and preserve the Pakistan history online.
All external links on this site are only for the informational and educational purposes and therefor, I am not responsible for the content of any external site.